نواز شریف: کسی لاڈلے کے لیے روز نئی ڈیل یا ڈھیل کا انتظام نہ کریں

پاکستان کی سیاسی جماعت مسلم لیگ نون کے سربراہ اور سابق وزیراعظم نواز شریف کا کہنا ہے کہ انتخابات کا سال آتے ہی ماضی کے اسی اصول پر کام شروع ہو گیا ہے کہ ’عوامی سوچ کا رخ موڑ دو، کسی جماعت کا راستہ روک لو اور کسی لاڈلے کے لیے راہ ہموار کر دو‘۔

سابق وزیراعظم نواز شریف نے یہ بات پنجاب ہاؤس میں ایک پریس کانفرنس کے دوران کہی۔

ان کا کہنا تھا کہ ’اگر پردے کے پیچھے یہ کارروائیاں نہ رکیں تو میں اسلام آباد میں ہی سارے ثبوت اور شواہد قوم کے سامنے رکھ دوں گا‘۔

نواز شریف نے کہا کہ مسلم لیگ نون کا ووٹ بینک دیگر جماعتوں سے زیادہ ہے، لہذا اس حقیقت سے خوفزدہ لوگ اس حقیقت کو بدلنے اور اپنی مرضی کا رخ دینے کے لیے ہاتھ پاؤں مار رہے ہیں۔

نواز شریف:’انصاف کا ترازو ہونا چاہیے تحریکِ انصاف کا نہیں’

نواز شریف کی احتساب عدالت میں تیسری پیشی، حاضری سے استثنیٰ نہیں

ریفرنس یکجا کرنے کے فیصلے پر نظرثانی کا حکم

انھوں نے اس پریس کانفرنس میں نہ تو سعودی عرب کے اپنے حالیہ دورے کے بارے میں کوئی بات کی اور نہ ہی صحافیوں کے سوالات کے لیے رکے۔

انھوں نے کہا کہ ’انتخابات میں ہر جماعت کو یکساں مواقع فراہم ہونے چاہییں، نہ اہلیت، ٹیلی فون کالز، خفیہ رابطوں اور غیر قانونی فیصلوں کے ذریعے کسی کے ہاتھ پاؤں نہ باندھے جائیں اور کسی لاڈلے کے لیے ہر روز ایک نئی ڈیل یا ڈھیل کا انتظام نہ کیا جائے‘۔