صرف 9 منٹ میں کرسی تیار کرنے والے ماہر روبوٹ تیار

کرسی,روبوٹ
کرسی,روبوٹ

یہ روبوٹ صرف 9 منٹ میں کرسی بنا لیتے ۔ سنگاپور میں سائنس دانوں کی تین رکنی ٹیم نے کرسیاں بنانے والے انتہائی عمدہ ’روبوٹ ہاتھ‘ بنالیے۔

اسکرو کے ذریعے کرسی کے مختلف حصوں کو جوڑنے میں عمومی طور پر ایک گھنٹے سے زیادہ وقت لگ سکتاتاہم سنگا پور میں نوجوان سائن دانوں نے کرسیاں بنانے والےجدید  ’روبوٹ ہاتھ‘ بنا کر سب کو حیران کردیا۔ یہ کاریگر روبوٹ نہایت عمدگی کے ساتھ صرف 9 منٹ میں ایک کرسی بنا لیتےاور بالکل ایک ماہر کاریگر کی طرح مضبوط کرسیاں بناتے ۔ یہ بھی پڑھیں: اب واٹس اپ پر غلطی سے بھیجا ہوامیسج واپس لیا جاسکے گا

نینیانگ ٹیکنالوجی یونیورسٹی (NTU)  میں میکینکل اور ایرو اسپیس انجینئرز کی تین رکنی ٹیم نے تھری ڈی کیمرے اور دو خود کار ہاتھوں والے روبوٹ سے کرسی تیار کرنے کا حیران کن مظاہرہ کیا۔ روبوٹ کے ہاتھ کسی ماہر بڑھئی کی طرح کرسی کے کئی حصوں کو ایک دوسرے سے بالکل درست طریقے اور مضبوطی سے جوڑنے میں کامیاب ہو اور اس کام کے لیے صرف نومنٹ کا وقت صرف ہوا۔

یہ پڑھیں: بڑی فائلوں کی آن لائن شیئرنگ اب انتہائی آسان

اسسٹنٹ پروفیسر فام کوآنگ کیونگ کا کہناکہ روبوٹ کا مختلف شکلوں اور سائز کی لکڑیوں کو اس ڈھنگ سے جوڑنا کہ وہ ایک کرسی ایک میں تبدیل ہوجائے ایک نہایت مشکل کامجس کے لیے ہم نے تین سال تک مسلسل محنت اور تحقیق کیجس کے بعد ہم انسانی ہاتھوں کی طرح کام کرنے والے روبوٹ بنانے میں کامیاب ہو ۔

یہ بھی پڑھیں: جنوبی افریقہ میں دو منہ والے بلی کے بچے کی پیدائش

سائنس دانوں کا خیالکہ یہ ’روبوٹ ہاتھ‘ فرنیچر بنانے والی صنعت کے علاوہ دیگر صنعتوں میں بھی اہم کردار ادا کرسکتےجس سے نہ صرف وقت کی بچت ہوگی بلکہ اس سے معیار بھی بلند ہو گا اور یہ ایک عام انسان کی بہ نسبت زیادہ تیزی اور مہارت سے کام کرتے جس کی وجہ سے غلطیوں کا امکان کم اور پروڈکشن میں اضافہ ہوگا۔