فیس بک کا فیچر ’ ڈاؤن ووٹ‘ امریکا کے بعد نیوزی لینڈ میں بھی متعارف

فیس بک کا فیچر
فیس بک کا فیچر

فیس بک ’ ڈاؤن ووٹ‘ آپشن کا پہلی بار آزمائشی استعمال رواں سال فروری میں امریکا میں کیا گیا تھا

نیوزی لینڈ: فیس بک نے اپنا نیا ’ ڈاؤن ووٹ‘ فیچر امریکا کے بعد اب نیوزی لینڈ اور آسٹریلیا میں آزمائشی طور پیش کردیا۔ اس خبر کو بھی پڑھیں : فیس بک نے کروڑوں جعلی اکاؤنٹس کا اعتراف کرلیا

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق رواں سال فروری میں فیس بک  کی جانب سے امریکا میں ایک نیا فیچر ’ ڈاؤن ووٹ‘ متعارف کرایا گیا تھا جس کی مدد سے صارفین غیر اخلاقی تبصروں پر ڈاؤن ووٹ دے سکیں گے جس کے بعد وہ کمنٹ ٹائم لائن سے چھپ جائے گا تاہم فیس بک تبصرے کے غیر اخلاقی یا غیر متعلقہ ہونے سے متعلق فیڈ بیک لے گا اور تصدیق کے بعد غیر معروف تبصرے ویب سائٹ سے ہٹا دیئے جائیں گے۔

اس آپشن کا مقصد غیر اخلاقی تبصروں اور پوسٹ کو ویب سائٹ سے خود کار طریقے سے ہٹاناتاکہ فیس بک کو محفوظ بنایا جاسکے اور غیر ضروری پوسٹ کی بوریت سے صارفین کو بچایا جاسکے۔ علاوہ ازیں اس آپشن سے جعلی خبروں کو بھی حذف کرنے میں مدد ملے گی جس خبر کو صارفین کی بڑی تعداد ڈاؤن ووٹ کرے گی وہ خبر سائٹ سے ہٹ جائے گی اس طرح جعلی خبروں اور منفی پروپیگنڈے کے ذریعے سنسنی پھیلانے والوں کو ناکامی کا سامنا ہو گا۔ اس خبر کو بھی پڑھیں : فیس بک نے مشہور چینلز کی ویڈیو سروس کا آغاز کردیا

فیس بک نے اس آپشن کے استعمال کا فیصلہ صارفین کے شدید مطالبے کے بعد کیا تھا اسی طرح امریکا کے صدارتی انتخاب میں فیس بک صارفین کا ڈیٹا استعمال ہونے کے حوالے سے بھی فیس بک کو عالمی دباؤ کا بھی سامناچنانچہ فیس بک نے انتخابات میں فیس بک کو پروپیگنڈے کے لیے استعمال کرنے کی حوصلہ شکنی کے لیے اس آپشن کے استعمال کا فیصلہ کیا۔ اس خبر کو بھی پڑھیں : فیس بُک ویڈیو چیٹ کے لیے نئے اینی میٹڈ ری ایکشن فیچرز