شاہ رخ بھی گروگرمیت سنگھ کی سزا پربول پڑے

بالی ووڈ کنگ شاہ رخ خان
بالی ووڈ کنگ شاہ رخ خان

حکومت ہنگامے بند کرواکر ملک میں امن کو یقینی بنائے،بھارتی
اداکار؛

ممبئی: ہندوؤں
اورسکھوں کے مذہبی رہنما گروگرمیت سنگھ کو بھارتی عدالت کی جانب
سے 20 سال قید کی سزا سنائے جانے پر شاہ رخ خان کے بیان نے مداحوں
کے دل جیت لیے۔

دوروز قبل بھارتی عدالت نے ہندوؤں اورسکھوں کے مذہبی رہنما
اورڈیرہ سچا سودافرقے کے سربراہ گروگرمیت سنگھ کو خواتین کے ساتھ
زیادتی کے کیس میں 20 سال قید کی سزا سنائی تھی، گروگرمیت کی سزا
کا فیصلہ آتے ہی بھارت میں ہنگامے پھوٹ پڑے تھے اورگرمیت سنگھ کی
سزا کے فیصلے پر بھارتی اداکار بھی خاموش نہ رہ سکے۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: گرو گرمیت سنگھ کو خواتین کے ساتھ زیادتی پر 20
سال قید

بالی ووڈ کنگ شاہ رخ خان نے بھی گرمیت سنگھ کی سزا سے متعلق ٹی وی
شو’’ٹیڈ ٹاک‘‘ میں کہا کہ گرمیت سنگھ نے جو بھی کیا وہ غلط تھا
لہٰذا عدالت نے اسے جو بھی سزا دی وہ بالکل ٹھیک ہے، میں عدالتی
فیصلے پرخوش ہوں۔ انہوں نے کہا کہ میرا یہ بیان شو کے ڈائریکٹر کو
پسند نہیں آئے گا کیونکہ جو کچھ بھی میں نے کہا وہ شو کا حصہ
نہیں تھا لیکن میں خود کواس موضوع پر بات کرنے سے روک نہیں سکا
تاہم شوانتظامیہ نے گرمیت سنگھ سے متعلق شاہ رخ خان کے بیان
کوچینل پرنشرنہیں کیا۔

واضح رہے کہ بھارتی ریاست ہریانہ کی خصوصی عدالت کے جج جگدیپ سنگھ
نے گرو گرمیت رام سنگھ کو 2002 میں اپنی 2 خواتین پیروکاروں کے
ساتھ زیادتی کرنے کے جرم میں 10، 10 سال قید کی سزا سنا
دی تھی۔

Leave a Reply